اسٹیٹ بینک آف پاکستان کا مانیٹری پالیسی کا اعلان

اگلے دو ماہ کے لئے شرح سود میں 150 بیسزپوائنٹس اضافے کا فیصلہ
اسٹیٹ بینک آف پاکستان نے مانیٹری پالیسی کا اعلان کردیا ہے آئندہ دو ماہ کے لئے شرح سود میں 150 بیسزپوائنٹس اضافے کا فیصلہ بھی کیا گیا مرکزی بینک کی شرح سود میں 150 بیس پوائنٹس کا اضافہ کیا گیا
مانیٹری پالیسی میں پاکستان کی مالی مشکلات اور معیشت کا بھی تذکرہ کیا گیا ہے میڈیا رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ مانیٹری پالیسی کے لیے بلائے گئے اجلاس میں بتایا گیا کہ پچھلے سال کے مقابلے میں کرنٹ اکاؤنٹ خسارے میں کمی ہوئی لیکن مہنگائی کی شرح میں اضافہ ہوا
یہ بھی کہا گیا کہ خام تیل کی قیمتوں میں اضافے کی وجہ سے مستقبل میں مشکلات پیش آسکتی ہیں جبکہ کرنٹ اکاؤنٹ خسارے میں بھی اضافہ ہو سکتا ہے روپے کی قدر میں کمی بھی اسٹیٹ بینک آف پاکستان کے اس فیصلے کی وجہ سے ہے مانیٹری پالیسی کمیٹی کے اجلاس میں تجاویز دی گئی کہ پاکستان کو اپنی برآمدات میں اضافہ کرنا ہوگا اجلاس میں کہا گیا کہ پاکستان میں جس تیز رفتاری سے مہنگائی میں اضافہ ہورہا ہے اس کی وجہ سے آگے چل کر مزید مشکلات پیش آئیں گی
اسٹیٹ بینک آف پاکستان کے مطابق بنیادی شرح سود میں 5-1فیصد اضافہ کیا گیا ہے

Be the first to comment on "اسٹیٹ بینک آف پاکستان کا مانیٹری پالیسی کا اعلان"

Leave a comment

Your email address will not be published.


*